27

ایمیزون کی مدد سے 54 ایکلویہ ماڈل رہائشی اسکولوں میں کمپیوٹر کی تعلیم

نئی دہلی، آن لائن خوردہ کمپنی ایمیزون ڈاٹ اِن نے پیر کو قبائلی امور کی مرکزی وزارت کے تحت نیشنل ایجوکیشن سوسائٹی فار ٹرائبل اسٹوڈنٹس (این ای ایس ٹی ایس ) کے ساتھ اپنی شراکت داری کو توسیع دی اور آندھرا پردیش، گجرات، مدھیہ پردیش، اوڈیشہ، راجستھان اور تلنگانہ ریاستوں میں 54 ایکلویہ ماڈل رہائشی اسکولوں (ای ایم آر ایس) میں ایمیزون فیوچر کےانجینئر پروگرام کے آغاز کا اعلان کیا ہے۔ اس کے تحت کلاس چھ سے کلاس نو تک کمپیوٹر اور مصنوعی ذہانت (اے آئی) پڑھائی کرائی جائے گی۔
اس تعاون کے ذریعے اب کمپیوٹر سائنس کے پرائمری ماڈیول کو ان اسکولوں میں لے جایا جائے گا۔ اس ماڈیول میں ایڈوانس بلاک پروگرامنگ اور اے آئی کو شامل کیا جا رہا ہے۔ یہ ماڈیول اب 54 ایکلویہ ماڈل رہائشی اسکولوں (ای ایم آر ایس) میں چھٹی سے نوویں جماعت کے طلباء کو پڑھایا جائے گا۔
پچھلے سال کے کام کے حوصلہ افزا نتائج کی بنیاد پر، نظر ثانی شدہ ماڈیول اوپٹیمائزڈ کوڈنگ اور اے آئی نصاب فراہم کرے گا جوسی بی ایس ای کی ہنرمندی کی تعلیم کے مطابق ہے۔ یہ کوڈنگ، لاجیکل سکوینسنگ، لرننگ لوپس اور بلاک پروگرامنگ کے موجودہ کورسز کے علاوہ ہوگا۔ بیس گھنٹے کے ماڈیول کوقبائلی طلباء کے کمپیوٹر سائنس اور کوڈنگ کے موجودہ تجربے کو مدنظر رکھتے ہوئے ڈیزائن کیا گیا ہے۔ چھٹی جماعت کے طلباء کو کمپیوٹر سائنس کی بنیادی باتیں سکھائی جائیں گی، ساتویں جماعت کے طلباء کو وژول پروگرامنگ کے جدید تصورات سے متعارف کرایا جائے گا، آٹھویں جماعت کو اے آئی کا تعارفی پرزنٹیشن سیشن دیا جائے گا اور نویں جماعت کے طلباء کواے آئی کے بنیادی اصول سکھائے جائیں گے۔ گریڈ 10 کے لیے، اے آئی ماڈیول تعلیمی سال 2024-25 میں سی بی ایس ای کے ہنر کے نصاب کے مطابق دستیاب کرایا جائے گا۔
اس پروگرام کو لرننگ لنکس فاؤنڈیشن (ایل ایل ایف) کے تعاون سے ڈیزائن کیا گیا ہے اور کمپیوٹر سائنس کی تعلیم اور کیریئر کو تلاش کرنے کے لیے پسماندہ طلبا کی رسائی بڑھانے پر توجہ مرکوز ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں