34

ای ڈی کا چھاپہ: 12.82 کروڑ روپے منجمد، 2.33 کروڑ روپے کی بے حساب نقدی ضبط

چنئی، انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے تمل ناڈو میں کئی مقامات پر چھاپے مار کر ریت کان کنی مافیا کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے 12.82 کروڑ روپے منجمد کئے اور 2.33 کروڑ روپے کی غیر محسوب نقدی اور 50 لاکھ روپے سے زیادہ مالیت کا 1204.6 گرام سونا ضبط کیا۔
ای ڈی نے ریت کی غیر قانونی کانکنی کے معاملے میں ریاست کے چھ اضلاع میں آٹھ ریت کانکنی یارڈ سمیت 34 مقامات پر چھاپے مارے۔
ای ڈی نے ایک رپورٹ میں کہا، ‘غیر قانونی ریت کانکنی معاملے میں، 9 ستمبر کو تمل ناڈو کے چھ اضلاع میں آٹھ ریت کان کنی یارڈ، ریت کان کنی کے ٹھیکیدار ایس. رامچندرن، کے راتھینم اور کریکلان اور ان کے ساتھی، آڈیٹر پی. شانموگراج، غیر قانونی ریت کی کان کنی کے معاملے اور تمل ناڈو حکومت کے محکمہ آبی وسائل کے حکام سمیت مختلف لوگوں کے رہائشی اور کاروباری احاطے سمیت 34 مقامات پر تلاشی لی گئی۔
ای ڈی نے کہا، “تلاشی کے دوران، مختلف قسم کے مجرمانہ دستاویزات ملے، 12.82 کروڑ روپے منجمد کیے گئے اور 2.33 کروڑ روپے کی بے حساب نقدی اور 56.86 لاکھ روپے مالیت کا 1024.6 گرام سونا ضبط کیا گیا۔
چھاپے کے دوران جعلی لین دین اور بے نامی کمپنیوں کے شواہد ملے۔ ای ڈی نے کہا کہ ریت کی کان کنی کی کل مقدار کا بھی پتہ لگایا جا رہا ہے اورغیر قانونی طور پر کھدائی کی گئی ریت کی نقل و حمل کے لیے استعمال ہونے والی لاریوں کی تعداد کا بھی سی سی ٹی وی فوٹیج کے ذریعے تجزیہ کیا جا رہا ہے۔

کیٹاگری میں : state

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں