39

گجرات میں 1095 کروڑ روپے کی سرمایہ کاری کے لیے پانچ مفاہمت ناموں پر دستخط

گاندھی نگر، گجرات کے وزیر اعلی بھوپیندر پٹیل کی موجودگی میں بدھ کو ریاست میں 1095 کروڑ روپے کی سرمایہ کاری کے لیے مزید پانچ مفاہمت ناموں پر دستخط کیے گئے۔
سرکاری ذرائع کے مطابق جنوری 2024 میں وزیر اعظم نریندر مودی کی ترغیب اور رہنمائی میں منعقد ہونے والی 10ویں وائبرینٹ گجرات گلوبل سمٹ کے پیش خیمہ کے طور پر آج مزید پانچ مفاہمت ناموں پر دستخط کیے گئے ہیں۔ مسٹر پٹیل کی موجودگی میں دستخط کیے گئے ان پانچ مفاہمت ناموں سے ریاست میں 1,095 کروڑ روپے کی کل ممکنہ سرمایہ کاری آئے گی۔ یہی نہیں اگلے سال تقریباً 1230 روزگار کے مواقع بھی پیدا ہوں گے۔
مسٹر پٹیل کی رہنمائی میں آئندہ وائبرینٹ سمٹ کے آغاز سے پہلے ہی ریاستی حکومت نے ریاست میں سرمایہ کاری حاصل کرنے کے لیے مختلف کاروباریوں کے ساتھ مفاہمت نامے پر دستخط کرنے کی ایک نئی پہل شروع کی ہے۔ اس منصوبے میں جولائی 2023 سے اب تک سات مرحلوں میں 13,536 کروڑ روپے کی کل ممکنہ سرمایہ کاری کے لیے مفاہمت ناموں پر دستخط کیے گئے ہیں۔ ان مفاہمت ناموں کے نفاذ سے ریاست میں مجموعی طور پر تقریباً 50,717 روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے۔
ہر ہفتے کے آغاز میں ایم او یو پر دستخط کرنے کی اس پہل کے تحت بدھ کو پانچ ایم او یو کے موقع پر وزیر صنعت بلونت سنگھ راجپوت، چیف سکریٹری راج کمار، چیف منسٹر کے چیف پرنسپل سکریٹری کے کیلاش ناتھن اور ایڈیشنل چیف سیکریٹریز، سینئر سیکریٹریز اور صنعتی گھرانوں کے نمائندے جنہوں نے مفاہمت نامے پر دستخط کیے موجود تھے۔ آج دستخط کیے گئے ایم او یو میں پیکیجنگ میٹریل کی پیداوار، پلاسٹک، ٹیکسٹائل اور قابل تجدید شعبوں، فارمولیشنز اور اے پی آئی اور خوردنی تیل، گرین ٹی، کھانے کے لیے تیار گجراتی کھچڑی، دیسی گیر گائے کے گھی اور شہد کی پیداوار اور گرین فیلڈ پلانٹس کے تحت ریڈی ٹو کک پروڈکٹس کے لئے ایم او یو شامل ہیں۔
مسٹر پٹیل کی قیادت میں ریاستی حکومت کے فعال نقطہ نظر کے نتیجے میں صنعتوں کے قیام کے لیے زمین کے حصول سے لے کر تمام اجازتیں آسانی سے حاصل کی جا رہی ہیں۔ اس کے لیے ایم او یو پر دستخط کرنے والے تاجروں نے اطمینان اور تشکر کا اظہار کیا۔

کیٹاگری میں : state

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں