35

مفرور اقتصادی مجرم قرار دینے والی ای ڈی کی درخواست کے خلاف میہول چوکسی کی درخواستوں کو ممبئی ہائی کورٹ نے مسترد کر دیا

ممبئی، بمبئی ہائی کورٹ نے جمعرات کو ملٹی کروڑ بینک گھوٹالے کے ملزم تاجر میہول چوکسی کی جانب سے داخل کی گئی درخواستوں کو مسترد کر دیا جس میں انہوں نے انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) کی ان درخواستوں کو چیلنج کیا تھا جس میں اسے مفرور اقتصادی مجرم (ایف ای او) قرار دیا گیا تھا۔
جسٹس ایس وی کوتوال نے چوکسی کی درخواستوں میں اپنا فیصلہ سناتے ہوئے دفاع کے دعوں کو مسترد کردیا جس میں تفشیشی ایجنسی کے طریقہ کار کے غیرقانونی عمل کا الزام لگایا گیا تھا اور ای ڈی کی درخواستوں کو چیلنج کیا گیا تھا
واضح رہیکہ محکمہ ای ڈی نے گزشتہ دنوں خصوصی پی ایم ایل اے کورٹ میں عضداشت داخل کی تھی اور چوکسی کو مفرور اقتصادی مجرم قرار دینے کی اجازت طلب کی تھی نیز اس اجازت کے بعد ایف ای او ایکٹ، 2018 کی دفعہ 4 اور 12 کے رو سے ملزم کی جائیدادوں کو ضبط کرنے کا راستہ ہموار ہوجائیگا
قانون کے مطابق کسی بھی شخص کو ایف ای او قرار دیا جا سکتا ہے اگراس کے خلاف 100 کروڑ روپے یا اس سے زیادہ کی رقم کے جرائم کے تحت وارنٹ جاری کیا گیاہو ، یا اگر وہ شخص ملک چھوڑ کر چلا گیا ہے یا اسکی واپسی کے کوئ آثار نظر نہیں آتے ہو
ارب پتی سونے کے بیوپاری نیرو مودی اور گیتانجلی جیمز کے پروموٹر ان کے چچا میہول چوکسی نے مبینہ طور پر کروڑوں کی دھوکہ دہی کا ارتکاب کیا تھا۔
چوکسی اور مودی پر الزام ہے کہ انہوں نے دھوکہ دہی کے دعووں پر مبنی پنجاب نیشنل بینک (PNB) سمیت ہندوستانی بینکوں کی غیر ملکی شاخوں کے حق میں 12,636 کروڑ روپے کے لیٹر آف انڈرٹیکنگ (LoU) اور غیر ملکی لیٹر آف کریڈٹ (FLC) حاصل کیے ہیں۔

کیٹاگری میں : state

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں