31

گراؤنڈ بریکنگ سیریمنی پر ایک ماہ میں رپورٹ دیں: یوگی

لکھنؤ، اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے گراؤنڈ بریکنگ سیریمنی(جی بی سی) کی تیاریوں کے حصے کے طور پر ریاست کے تمام ضلع مجسٹریٹوں (ڈی ایم) کو ہدایت جاری کی ہے کہ وہ ایک ماہ کے اندر سرمایہ کاری سے متعلق رپورٹ پیش کریں ۔
مسٹر یوگی نے تمام ضلع مجسٹریٹوں اور ڈویژنل کمشنروں کو بھی ہدایت دی ہے کہ وہ سرمایہ کاری پر مبنی جائزہ اجلاس منعقد کریں اور ہر سطح پر جوابدہی طے کریں تاکہ جی بی سی کے ذریعے زیادہ سے زیادہ سرمایہ کاری کے پروجیکٹوں کو زمین پر اتارا جاسکے۔
واضح رہے کہ گلوبل انویسٹرس سمٹ 2023 ( جی آئی ایس- 23) کے دوران اتر پردیش کو 36 لاکھ کروڑ روپے سے زیادہ کی سرمایہ کاری کی تجاویز موصول ہوئی تھیں۔ اس مدت کے دوران سرمایہ کاروں نے ریاست کے تمام 75 اضلاع میں سرمایہ کاری میں گہری دلچسپی ظاہر کی تھی۔
اعلیٰ سطحی میٹنگ میں وزیر اعلیٰ نے تمام ڈسٹرکٹ مجسٹریٹس اور ڈسٹرکٹ ڈپٹی کمشنرز کو ہدایت کی کہ وہ زمینی بینک کے ذریعے سرمایہ کاروں کو زمین دستیاب کرانے پر فوکس کریں۔ انہوں نے جی بی سی کو جی آئی ایس-23 جیسا عظیم الشان بنانے کی ضرورت پر زور دیا اور انہیں ہدایت کی کہ وہ انتہائی شفافیت کے ساتھ کام کریں اور زیر التوا معاملات کو جلد از جلد نمٹا ئیں۔
انہوں نے کہا کہ ریاست میں موجودہ ماحول سرمایہ کاری کے لیے بہترین ہے۔ مسٹر یوگی نے کہا ’’چھوٹے اضلاع جیسے مرزا پور، کاس گنج، مہاراج گنج، سنت روی داس نگر، بلرام پور، ہاتھرس، ایودھیا، گونڈا، بارہ بنکی اور سلطان پور میں بھی بڑی سرمایہ کاری کی تجاویز موصول ہوئی ہیں۔‘‘ اس کو ذہن میں رکھتے ہوئے وزیراعلی نے افسران کو ہدایت دی کہ وہ تمام سرمایہ کاروں کے ساتھ ایک ایک میٹنگ کریں اور کسی بھی مسائل یا سرمایہ کاری کی رکاوٹوں کو دور کریں۔ اس کے علاوہ تمام ضلع مجسٹریٹس کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ سرمایہ کاری سے متعلق رپورٹ ایک ماہ کے اندر وزیر اعلیٰ کے دفتر میں جمع کرائیں۔
میٹنگ میں افسران نے دفعہ 80 یعنی زرعی اراضی کو غیر زرعی اراضی میں تبدیل کرنے کی رپورٹ وزیر اعلیٰ کے سامنے پیش کی جس میں بتایا گیا کہ جی آئی ایس- 23 کے بعد زرعی زمین کو تبدیل کرنے کی درخواستوں میں اضافہ ہوا ہے۔ ریاست میں زمین کو غیر زرعی زمین میں بدلنا اب تک ریاست کے مختلف اضلاع سے 42,706 درخواستیں موصول ہوئی ہیں۔ ان میں سے 36,327 درخواستیں نمٹا دی گئی ہیں جن کا تناسب 85 فیصد ہے۔ اب تک کل 6388 درخواستیں زیر التوا ہیں۔ ان میں سے 1224 زیر التواء درخواستیں 45 دن کی مقررہ تاریخ کے اندر ہیں جبکہ 5121 زیر التواء درخواستیں مقررہ تاریخ کے بعد کی ہیں۔
اسی طرح سرمایہ کاروں نے نویش مترا پورٹل کے ذریعے 1017 درخواستیں دیں۔ ان میں سے 904 درخواستیں نمٹا دی گئی ہیں جن کا تناسب 89 فیصد ہے۔ 113 درخواستیں زیر التوا ہیں۔ ان میں سے 104 زیر التوا درخواستیں مقررہ وقت کی حد کے اندر ہیں جبکہ نو زیر التواء درخواستیں مقررہ مدت کے بعد کی ہیں۔

کیٹاگری میں : state

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں